1. اس فورم پر جواب بھیجنے کے لیے آپ کا صارف بننا ضروری ہے۔ اگر آپ ہماری اردو کے صارف ہیں تو لاگ ان کریں۔

سیاہ ست دانوں کے لطائف

'قہقہے، ہنسی اور مسکراہٹیں' میں موضوعات آغاز کردہ از ع س ق, ‏28 مئی 2006۔

  1. ھارون رشید
    آف لائن

    ھارون رشید برادر سٹاف ممبر

    شمولیت:
    ‏5 اکتوبر 2006
    پیغامات:
    125,704
    موصول پسندیدگیاں:
    14,181
    ملک کا جھنڈا:
    "ایک دفعہ کا ذکر ہے بیٹا جب میں چیف جسٹس تھا تووقت کے فرعون کو کٹہرے میں کھڑا کیا
    اس کی چوری کےتمام ثبوت دیکھے
    ملک کا بادشاہ چور ثابت ہوا۔۔۔۔۔۔۔۔۔"
    " پھرکیاہواداداجی؟ " پوتے نے اپنا سر رضائی میں کچھ اور چھپاتے ہوئے پوچھا ۔
    بوڑھے جج نے رومال میں ناک صاف کی ، آستین نے بچا کچا بلغم پونچھا اور خر خر اتی ہوئی آواز میں جواب دیا :
    "سردیوں کی چھٹیاں"
    نعیم اور پاکستانی55 .نے اسے پسند کیا ہے۔
  2. ھارون رشید
    آف لائن

    ھارون رشید برادر سٹاف ممبر

    شمولیت:
    ‏5 اکتوبر 2006
    پیغامات:
    125,704
    موصول پسندیدگیاں:
    14,181
    ملک کا جھنڈا:
    ایک دُور دراز کے گاؤں میں ایک سیاستدان کی تقریر تھی۔
    تقریبن تین سو (300) کلو میٹر ٹُوٹی پُھوٹی سڑکوں پر سفر کرنے کے بعد جب وہ تقریر کی جگہ پر پہنچے تو دیکھا کہ صرف ایک کسان انکی تقریر سُننے کے لئے بیٹھا ہُوا تھا۔
    اس اکیلے شخص کو دیکھ کر سیاستدان کو سخت مایوسی ہُوئی، اور نہائیت افسردہ انداز میں کہنے لگے،
    بھائی، آپ تو صرف اکیلے آدمی آئے ہو، سمجھ میں نہیں آتا کہ اب میں تقریر کروں یا نہیں؟
    کسان نے بولا، صاحب میرے گھر پر بیس (20) گدھے ہیں، فرض کریں میں ان کو چارہ ڈالنے گیا، اور دیکھا کہ وہاں صرف ایک گدھا موجود ہے، اور باقی دوڑ گئے ہیں، تو کیا میں اس ایک گدھے کو بھی چارہ نہ ڈالوں؟ یا اُسے بھی بُھوکا مار دوں۔؟
    کسان کا عقلمندانہ جواب سُن کر سیاستدان بہت خُوش ہُوا، اور ڈائس پر جا کر اس اکیلے کسان کے لئے دو(2) گھنٹے تک پُرجوش انداز میں تقریر کرتا رہا۔۔!
    تقریر ختم کرنے کے بعد، وہ ڈائس سے اُتر کر سیدھا کسان کے پاس آیا اور بولا، تُمہاری گدھے والی مثال مجھے بہت پسند آئی، اب تُم بتاؤ، تُمہیں میری تقریر کیسی لگی۔؟
    کسان بولا، صاحب، اُنیس (19) گدھوں کی غیر موجودگی کا یہ مطلب تو نہیں کہ بِیس(20) گدھوں کا چارہ، ایک گدھے کے آگے ڈال دِیا جائے۔
    مجھ میں اتنی عقل ہے، مگر آپ۔ تو؟
    نعیم اور زنیرہ عقیل .نے اسے پسند کیا ہے۔
  3. زنیرہ عقیل
    آن لائن

    زنیرہ عقیل ممبر

    شمولیت:
    ‏27 ستمبر 2017
    پیغامات:
    1,352
    موصول پسندیدگیاں:
    750
    ملک کا جھنڈا:
    ایک مولوی نواز شریف کے پاس گیا اور کہا : مخلوق کو اتنا تنگ نہ کرو اللہ عذاب دے گا۔
    نواز شریف نے جواب دیا: تنگ تو زرداری کررہا تھا میں تو عذاب ہوں۔
    نعیم، پاکستانی55 اور ھارون رشید نے اسے پسند کیا ہے۔
  4. ھارون رشید
    آف لائن

    ھارون رشید برادر سٹاف ممبر

    شمولیت:
    ‏5 اکتوبر 2006
    پیغامات:
    125,704
    موصول پسندیدگیاں:
    14,181
    ملک کا جھنڈا:
    ایک تقریب میں ایک صاحب کی ملاقات ایک بہت بڑے سیاہ ستدان سے ہوگئی ۔ وہ صاحب جلدی سے سیاہ ستدان کی طرف بڑھے اور کہا
    “میں بہت عرصے سے آپ سے ملاقات کرنا چاہ رہا تھا۔ دراصل میں نے آپ کے بارے میں بہت کچھ سن رکھا ہے اور۔۔۔۔۔“

    “ دیکھیے جناب“ سیاہ ستدان نے اس کی بات کاٹتے ہوئے کہا “ آپ نے ضرور سنا ہوگا ۔ لیکن میرا دعویٰ ہے کہ آپ اس میں سے کچھ بھی ثابت نہیں‌کر سکیں گے۔“
    نعیم، زنیرہ عقیل اور پاکستانی55 نے اسے پسند کیا ہے۔
  5. زنیرہ عقیل
    آن لائن

    زنیرہ عقیل ممبر

    شمولیت:
    ‏27 ستمبر 2017
    پیغامات:
    1,352
    موصول پسندیدگیاں:
    750
    ملک کا جھنڈا:
    ہاہاہا یہ بھی وہی ہوگا
    ھارون رشید نے اسے پسند کیا ہے۔
  6. زنیرہ عقیل
    آن لائن

    زنیرہ عقیل ممبر

    شمولیت:
    ‏27 ستمبر 2017
    پیغامات:
    1,352
    موصول پسندیدگیاں:
    750
    ملک کا جھنڈا:
    استاد : قاتل کسے کہتے ہیں
    شاگرد : پتہ نہیں

    استاد : اگر تم اپنی بیوی کو قتل کردو تو کیا کہلاؤ گے
    شاگرد :

    زرداری
    نعیم اور ھارون رشید .نے اسے پسند کیا ہے۔
  7. ھارون رشید
    آف لائن

    ھارون رشید برادر سٹاف ممبر

    شمولیت:
    ‏5 اکتوبر 2006
    پیغامات:
    125,704
    موصول پسندیدگیاں:
    14,181
    ملک کا جھنڈا:
    بات تو سچ کہہ دی ہے بچے نے
    زنیرہ عقیل نے اسے پسند کیا ہے۔
  8. زنیرہ عقیل
    آن لائن

    زنیرہ عقیل ممبر

    شمولیت:
    ‏27 ستمبر 2017
    پیغامات:
    1,352
    موصول پسندیدگیاں:
    750
    ملک کا جھنڈا:
    آج کل یہ قسم خاصی عام ہے ۔
    ازلی مایوس:
    آج کل یہ قسم خاصی عام ہے ۔ یہ ایسے لوگ ہیں جو ۔ کسی شادی پر چلے جائیں تو وہاں‌ تھوڑی دیر بعد اپنی گفتگو سے ایسا ماحول بنادیں گے کہ جیسے چالیسویں کا ختم ہو رہا ہو۔ ان کا بانڈ بھی نکل آئے تو یہ خبر ایسے سنائیں گے جیسے ڈاکٹر نے انہیں کینسر تشخیص کیا ہے۔ بھوک زیادہ لگے تو سوچنے لگیں گے کہ انہیں شوگر ہو گئی ہے، نہ لگے تو سوچیں گے کہ کالا یرقان ہوگیا ہے۔ یہ ایسے لوگ ہوتے ہیں کہ جنت میں بھی چلے جائیں تو کہیں گے ”مزا نہیں‌ آیا، دودھ کی نہر میں کسی نے پانی ملا دیا ہے اور شہد کی نہر میں گلوکوز“
    ازلی پر امید:
    یہ قسم بہت شاذ و نادر پائی جاتی ہے۔ یہ اپنے والد کی وفات پر افسوس کرنے والے کو بھی سکھوں‌ کے لطیفے سنانے لگتے ہیں۔ خدانخواستہ حادثے میں ٹانگ وغیرہ ٹوٹ جائے تو کہیں گے شکر ہے جوتے بچ گئے۔ محبوبہ کی بے وفائی پر شکر کریں گے کہ اب رات دیر تک چیٹنگ نہیں کرنی پڑتی۔ زرداری کے صدر بننے پر ایسے ہی ایک شخص نے کہا کہ شکر ہے اس سے زیادہ ذلالت ممکن نہیں تھی، اب اس کے بعد کوئی اچھا آدمی ہی آئے گا۔
    افلاطون کے رشتے دار :
    ان لوگوں کے پاس ہر مسئلے کا حل اور ہر تالے کی چابی ہوتی ہے۔ دنیا کے کسی مسئلے پر بحث کر کے دیکھ لیں، یہ آپ کو ”تیرہویں گل“ ہی سنائیں گے۔ بڑے بڑے لوگوں‌ کے ساتھ تعلقات کی کہانیاں‌ اتنی روانی سے سنائیں گے کہ اتنی روانی سے کوئی ا ب ت نہیں سنا سکتا۔ اپنی ہر بات کو حرف آخر سمجھیں گے اور کوئی اس سے اتفاق نہ کرے تو اسے مردود۔۔ان کے نزدیک دنیا ان کے ہونے سے ایک بہتر جگہ بن گئی ہے اگر وہ نہ ہوتے تو بنی نوع انسان کا مستقبل تاریک ہوجاتا۔ ان کو گھر کے اندر کوئی بولنے نہیں‌دیتا ۔۔۔۔ اور گھر کے باہر یہ کسی کو بولنے نہیں دیتے !!
    میسنے :
    کائنات میں جانداروں کی سب سے خطرناک قسم ہے۔ ان کا ظاہر بھیڑ کا اور باطن بھیڑیے اور سانپ کا مکسچر ہوتاہے۔ جس سے بھی ملیں‌ اسے لگتا ہے کہ یہ دنیا میں‌میرا سب سے بڑا خیر خواہ ہے۔ بقول نور جہاں‌ ”اکھ لڑی بدوبدی موکا ملے کدی کدی، کل نئیں کسی نے ویکھی مزا لییے اج دا“ ان کی زندگی کا نصب العین ہوتا ہے۔ موقعہ ملنے پر اپنے باپ کو بھی نہیں بخشتے۔ اور کہیں ”بدوبدی اکھ لڑ“ جائے تو گدھے سمیت سب کو اپنا باپ بنانے میں ذرا تاخیر نہیں کرتے۔ اس قسم کی سب سے کلاسیک مثال حضرت مولانا ڈیزل مدظلہ العالی ہیں
  9. نعیم
    آف لائن

    نعیم مشیر

    شمولیت:
    ‏30 اگست 2006
    پیغامات:
    57,614
    موصول پسندیدگیاں:
    10,440
    ملک کا جھنڈا:
    یہ واقعہ تو پچھلے دنوں سچی مچی ہوا تھا
    زنیرہ عقیل نے اسے پسند کیا ہے۔
  10. زنیرہ عقیل
    آن لائن

    زنیرہ عقیل ممبر

    شمولیت:
    ‏27 ستمبر 2017
    پیغامات:
    1,352
    موصول پسندیدگیاں:
    750
    ملک کا جھنڈا:
    تفصیل بتائیے نا

اس صفحے کو مشتہر کریں