1. اس فورم پر جواب بھیجنے کے لیے آپ کا صارف بننا ضروری ہے۔ اگر آپ ہماری اردو کے صارف ہیں تو لاگ ان کریں۔

کیا کہوں کیسے ہیں پیارے ترے پیارے گیسو

'نعتِ سرکارِ دو عالم صلی اللہ علیہ وسلم' میں موضوعات آغاز کردہ از intelligent086, ‏12 فروری 2021۔

  1. intelligent086
    آف لائن

    intelligent086 ممبر

    شمولیت:
    ‏28 اپریل 2013
    پیغامات:
    6,320
    موصول پسندیدگیاں:
    776
    ملک کا جھنڈا:
    کیا کہوں کیسے ہیں پیارے ترے پیارے گیسو
    دونوں عارض ہیں ضحی لیل کے پارے گیسو
    دستِ قدرت نے ترے آپ سنوارے گیسو
    حور سو ناز سے کیوں ان پہ نہ وارے گیسو
    خاکِ طیبہ سے اگر کوئی نکھارے گیسو
    سنبلِ خلد تو کیا حور بھی ہارے گیسو
    کس لیے عنبرِ سارا نہ ہوں سارے گیسو
    گیسو کس کے ہیں یہ پیارے ہیں تمہارے گیسو
    یہ گھٹا جھوم کے کعبہ کی فضا پر آئی
    اُڑ کے یا ابرو پہ چھائے ہیں تمہارے گیسو
    نیّرِ حشر ہے سر پر نہیں سایہ سرور
    ہے کڑی دھوپ کریں سایہ تمہارے گیسو
    سوکھ جائے نہ کہیں کشتِ امل اے سرور
    بوندیاں لکّۂ رحمت سے اُتارے گیسو
    اپنی زُلفوں سے اگر نعلِ مبارک پونچھے
    رضواں برکت کے لیے حور کے دھارے گیسو
    پیشِ مولائے رضا جو ہیں جھکے سجدے میں
    کرتے ہیں بخششِ اُمت کے اشارے گیسو
    پھوار مستوں پہ ترے ابرِ کرم کی برسے
    ساقیا کھول ذرا حوض کنارے گیسو
    عنبرستاں بنے محشر کا وہ سارا میداں
    کھول دے ساقی اگر حوض کنارے گیسو
    بادہ و ساقی لبِ جُو تو ہیں پھر ابر بھی ہو
    ساقی کھل جائیں ترے حوض کنارے گیسو
    یہ سرِ طور سے گرتے ہیں شرارے نوریؔ
    روئے پُر نور پہ یا وارے ہیں تارے گیسو
    نوری بریلوی​
     

اس صفحے کو مشتہر کریں