1. اس فورم پر جواب بھیجنے کے لیے آپ کا صارف بننا ضروری ہے۔ اگر آپ ہماری اردو کے صارف ہیں تو لاگ ان کریں۔

کیا حال سُناواں دِل دا

'صوفیانہ کلام' میں موضوعات آغاز کردہ از سید شہزاد ناصر, ‏8 مئی 2019۔

  1. سید شہزاد ناصر
    آف لائن

    سید شہزاد ناصر ناظم سٹاف ممبر

    شمولیت:
    ‏24 مئی 2015
    پیغامات:
    1,459
    موصول پسندیدگیاں:
    2,245
    ملک کا جھنڈا:
    کیا حال سُناواں دِل دا
    کوئی محرم راز نہ مِل دا
    دلِ زار کا حال کیا سناؤں کہ کوئی محرم راز ہی نہیں ملتا۔

    مونہہ دُھوڑ مٹی سر پایم
    سارا ننگ نموج ونجایم
    کوئی پُچھن نہ ویہڑے آیم
    ہتھوں اُلٹا عالم کِھل دا
    ننگ نموج - عزت و شرم، ونجایم - گم کرنا، ہتھوں - بلکہ، کھل دا - ہنستا ہے
    اس عشق نے میرے چہرے اور سر میں مٹی ڈال دی ہے اور ساری عزت و شرم و وقار برباد ہو گیا ہے، اور کوئی بھی میرا یہ حال دیکھنے میرے گھر نہیں آیا بلکہ الٹا لوگ ٹھٹھا اور مذاق کرتے ہیں۔

    آیا بھار برہوں سِر باری
    لگی ہو ہو شہر خواری
    روندے عمر گذاریم ساری
    ناں پایم ڈس منزل دا
    برہوں - ہجر، ڈس - سراغ
    میرے سر پر ہجر کا بھاری بوجھ آن پڑا ہے، اور شہر شہر رسوائی اور خواری ہو رہی ہے، اور اسی حالت میں ساری عمر روتے روتے گزر گئی ہے لیکن پھر بھی منزل کا کوئی سراغ نہیں ملا۔

    دل یار کِتے کُرلاوے
    تڑپاوے تے غم کھاوے
    دُکھ پاوے سُول نبھاوے
    ایہو طَور تینڈے بیدل دا
    میرا دل یار کی جدائی میں روتا ہے، تڑپتا ہے اور غم کھاتا ہے، دکھ سہتا ہے اور درد برداشت کرتا ہے، تیرے عاشق کی یہی حالت ہے۔

    کئی سہنس طبیب کماون
    سے پڑیاں گھول پیاون
    مینڈے دل دا بھید نہ پاون
    پوے فرق نہیں ہِک تِل دا
    سہنس - تجربہ کار، سے - سو
    کئی سیانے اور تجربہ کار طبیب مرا علاج کر رہے ہیں، سو سو دوائیں گھول گھول کر پلا رہے ہیں، لیکن وہ میرے دل کا راز نہیں پاتے اور انکے اس درمان سے مجھے کوئی ذرہ برابر فرق نہیں پڑتا۔

    پُنوں ہُوت نہ کھڑ موکلایا
    چھڈ کلہڑی کیچ سدھایا
    سُوہنے جان پچھان رُلایا
    کُوڑا عذر نبھایم گِھل دا
    نہ کھڑ موکلایا - ساتھ نہ لے کے گیا، کُوڑا - جھوٹا، گِھل دا، کچی نیند کا
    پنوں مجھے ساتھ نہیں لے کے گیا اور اکیلی چھوڑ کر کیچ چلا گیا ہے، اس کی جان پہچان نے رلایا ہے اور اس نے سب کچھ بھلا دیا ہے اور میں نے اس حالتِ زار میں کچی نیند کا جھوٹا بہانہ کر لیا ہے۔

    سُن لیلیٰ دھانہہ پکارے
    تینڈا مجنوں زار نزارے
    سُوہنا یار توڑیں ہک وارے
    کدی چا پردہ محمِل دا
    دھانہہ -فریاد، زار نزار - غموں کا مارا ہوا، کمزور
    اے لیلیٰ میری فریاد سن لے، تیرا یہ مجنوں غموں کا مارا ہوا ہے۔ اے دوست کبھی ایک بار محمل کا پردہ اٹھا کر مجھے اپنا دیدار عطا کر دے۔

    دل پریم نگر ڈوں تانگھے
    جتھاں پینڈے سخت اڑانگے
    نہ یار فرید نہ لانگھے
    ہے پندھ بہوں مشکِل دا
    ڈوں - طرف، تانگھے - چاہے، اڑانگے - دشوار، لانگھے - رستے، پندھ - سفر
    دل پریم نگر کی طرف جانے کی چاہ رکھتا ہے، لیکن وہاں کے راستے بڑے دشوار ہی ہیں اور فرید ادھر کی راہوں سے واقف نہیں ہے، یہ سفر بہت ہی مشکل ہے۔

    کیا حال سناواں دل دا
    کوئی محرم راز نہ مِل دا​
     
    ابرار حسین شاہ، آصف احمد بھٹی اور ملک بلال نے اسے پسند کیا ہے۔
  2. آصف احمد بھٹی
    آف لائن

    آصف احمد بھٹی ناظم خاص سٹاف ممبر

    شمولیت:
    ‏27 مارچ 2011
    پیغامات:
    40,593
    موصول پسندیدگیاں:
    6,028
    ملک کا جھنڈا:
    سبحان اللہ ۔ ۔ ۔ کیا خوبصورت کلام ہے اور آپ نے ترجمہ بھی خوب کیا ہے ۔ ۔ ۔
     
    سید شہزاد ناصر نے اسے پسند کیا ہے۔
  3. ابرار حسین شاہ
    آف لائن

    ابرار حسین شاہ ممبر

    شمولیت:
    ‏6 اگست 2011
    پیغامات:
    13
    موصول پسندیدگیاں:
    11
    ملک کا جھنڈا:
    زبردست شراکت
    سلامت رہیں
     
    آصف احمد بھٹی نے اسے پسند کیا ہے۔
  4. آصف احمد بھٹی
    آف لائن

    آصف احمد بھٹی ناظم خاص سٹاف ممبر

    شمولیت:
    ‏27 مارچ 2011
    پیغامات:
    40,593
    موصول پسندیدگیاں:
    6,028
    ملک کا جھنڈا:
    بجا فرمایا آپ نے شاہ صاحب ۔ ۔ ۔
     

اس صفحے کو مشتہر کریں