1. اس فورم پر جواب بھیجنے کے لیے آپ کا صارف بننا ضروری ہے۔ اگر آپ ہماری اردو کے صارف ہیں تو لاگ ان کریں۔

وباء میں پُرسکون رہنے کے طریقے ۔۔۔۔۔ تحریر : رضوان عطا

'میڈیکل سائنس' میں موضوعات آغاز کردہ از intelligent086, ‏21 اپریل 2020۔

  1. intelligent086
    آف لائن

    intelligent086 ممبر

    شمولیت:
    ‏28 اپریل 2013
    پیغامات:
    3,911
    موصول پسندیدگیاں:
    571
    ملک کا جھنڈا:
    وباء میں پُرسکون رہنے کے طریقے ۔۔۔۔۔ تحریر : رضوان عطا

    کورونا وائرس کے پھیلاؤ اور اموات کی خبروں نے ہر طرف تشویش اور خوف کی لہر دوڑا دی ہے۔ اس سے ذہنی دباؤ میں بھی اضافہ ہو گیا ہے۔ تشویش ، خوف اور ذہنی دباؤ کا نتیجہ بے خوابی کی صورت میں نکل سکتا ہے۔ ایک اور عامل بھی نیند میں خلل ڈال سکتا ہے اور وہ ہے نظام الاوقات میں تبدیلی۔ یہ تبدیلی لاک ڈاؤن اور سماجی سرگرمیوں میں کمی کے باعث گھر تک محدود ہونے سے واقع ہوئی ہے۔ اگر صبح اٹھ کر کام پر جانا اور شام کو لوٹنا ہو تو فرد جلد سو جاتا ہے ورنہ رات دیر تک جاگنے کی عادت پڑ سکتی ہے۔
    نیند ہمارے لیے بہت اہم ہے۔ اس سے دماغی اور جسمانی صحت درست رہتی ہے اور نظامِ مدافعت کو مدد ملتی ہے۔ شاید ان دنوں اچھی اور معیاری نیند کی اہمیت دو چند ہو گئی ہے کیونکہ قوت مدافعت کے کمزور پڑنے سے مرض پیدا کرنے والے وائرس زیادہ نقصان پہنچا سکتے ہیں۔ لہٰذا اچھی، معیاری اور نظام الاوقات کے مطابق نیند کے لیے چند مشورے حاضر ہیں۔
    طویل قیلولہ مت کریں
    اگر آپ گھر ہی میں رہتے ہیں توہو سکتا ہے کہ دوپہر کے وقت بستر پر لیٹے لیٹے نیند آپ کو گھیر لے اور آپ سو جائیں۔ تھوڑی دیر سونے میں حرج نہیں لیکن زیادہ دیر کا مطلب رات کی نیند خراب کرنا ہے۔
    ورزش کریں
    بہت سے لوگ ورزش کے لیے باہر کسی پارک، میدان، باغ یا جم جانا لازمی خیال کرتے ہیں۔ دراصل گھر کے اندر اچھی طرح ورزش کی جا سکتی ہے۔ گھر میں رہنے پر مجبور ہونے کی صورت میں جسمانی سرگرمی کم ہو جاتی ہے لہٰذا ورزش کی ضرورت مزید بڑھ جاتی ہے۔
    وبا ء کو ذہن پر سوار مت کریں
    کووڈ19- کہاں اور کتنا پھیل رہا ہے، اس بارے میں جاننا چاہیے تاکہ خبردار رہا جا سکے۔ لیکن افواہوں سے بچیں اگر آپ کی تشویش بڑھ رہی ہے، خوف اور ذہنی دباؤ میں اضافہ ہو رہا ہے تو سوشل میڈیا سے دور ہو جائیں ۔ ہمہ وقت کووڈ19- کی اطلاعات کو ذہن میں سمانے کا خبط پریشانی کا باعث بن سکتا ہے جس سے نیند متاثر ہوتی ہے۔
    کام جاری رکھیں
    اگر آپ طالب علم ہیں تو پڑھائی جاری رکھیں۔ بہت سے افراد دفتر جانے کے بجائے گھر سے کام کر رہے ہیں، اگر آپ کو گھر سے کام کرنے کا موقع مل رہا ہے تو خود کو مصروف رکھیں اور اس موقع کو مت گنوائیں۔ اپنا ایک نظام الاوقات ترتیب دیں جو پہلے سے زیادہ مختلف نہ ہو اور اس پر کاربند رہیں۔ نیند کا خلل شدت اختیار کرجانے کی صورت میں ماہرنفسیات یا ڈاکٹر سے رابطہ کریں۔
     

اس صفحے کو مشتہر کریں