1. اس فورم پر جواب بھیجنے کے لیے آپ کا صارف بننا ضروری ہے۔ اگر آپ ہماری اردو کے صارف ہیں تو لاگ ان کریں۔

قرآن کے شہید اوراق کی تلفی کیلئے ڈسپوزل پلانٹ کی منظوری , لاہور میں ٹریفک ماسٹر پلان بنائیں : بزدار

'حالاتِ حاضرہ' میں موضوعات آغاز کردہ از intelligent086, ‏1 فروری 2020۔

  1. intelligent086
    آف لائن

    intelligent086 ممبر

    شمولیت:
    ‏28 اپریل 2013
    پیغامات:
    7,273
    موصول پسندیدگیاں:
    796
    ملک کا جھنڈا:
    قرآن کے شہید اوراق کی تلفی کیلئے ڈسپوزل پلانٹ کی منظوری , لاہور میں ٹریفک ماسٹر پلان بنائیں : بزدار

    پنجاب کابینہ کا24واں اجلاس،سٹیمپ رولز میں ترامیم،ٹڈی دل سے بچاؤ کیلئے 50کروڑ جاری کرنیکی منظوری دی گئی فیروز پور روڈ، جیل روڈ، مال اور کینال روڈ کو ٹریفک کیلئے ماڈل بنائیں،سرکلر روڈ کو اپ لفٹ کیا جائے گا:وزیر اعلیٰ پنجاب
    لاہور(سیاسی رپورٹر سے )وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی زیرصدارت صوبائی کابینہ کا 24 واں اجلاس ہوا جس میں قرآن کریم کے شہید اوراق کی تلفی کیلئے ڈسپوزل پلانٹ لگانے کی منظوری دی گئی،کابینہ نے سٹیمپ رولز 1934 میں ترامیم کی بھی توثیق کردی ۔وزیر اعلٰی پنجاب نے کہا کہ لاہور میں ٹریفک میں خلل کا باعث بننے والی رکاوٹوں کو فی الفور دور کیا جائے اور شہر کی ٹریفک کیلئے ماسٹر پلان بنایا جائے ۔صوبائی کابینہ نے سٹیمپ رولز 1934 میں ترامیم کی منظوری دی ،جس کے تحت سٹیمپ وینڈرزکا مکمل ڈیٹا آٹومیشن ہو گااورسٹیمپ وینڈرز کوکم مالیت کے سٹیمپ پیپرزکی خرید و فروخت کیلئے سمارٹ کارڈ دیا جائے گا، پنجاب الیکٹرانک انوائس مانیٹرنگ سسٹم کے رولز 2019 ،سیلز ٹیکس آن سروسز ایکٹ 2012 کے سیکنڈ شیڈول میں ترمیم کی منظوری دی گئی ۔اس ترمیم سے تعمیراتی صنعت کو سہولت ملے گی، کابینہ نے کینسر کے مریضوں کے علاج معالجے کیلئے دوا ساز کمپنی نوارٹس سے مفاہمت کی یادداشت میں جون 2020 تک توسیع کا فیصلہ کیا جبکہ نوارٹس سے دوسری مفاہمتی یادداشت کے حوالے سے ٹرم آف ریفرنس کا دوبارہ جائزہ لیا جائے گا،اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ دوسری مفاہمتی یادداشت کا جائزہ لینے کے لئے کمیٹی تشکیل دی جائے گی جو ہر پہلو سے جائزہ لے کر حتمی سفارشات پیش کرے گی،اجلاس میں پروبیشن آف اوفینڈرز آرڈیننس 1960 اور پروبیشن آف اوفینڈرز رولز 1961 میں ترامیم کی منظوری دی گئی جبکہ پولیس ڈاگ بریڈنگ سنٹر اینڈ ٹریننگ سکول سپیشل برانچ پنجاب، لاہور کے پرنسپل کے عہدے کیلئے پنجاب پولیس سپیشل برانچ ٹیکنیکل کیڈر سروس رولز 2016 میں ترامیم کا فیصلہ کیا گیا۔کابینہ نے پنجاب انوائرمینٹل ٹربیونل لاہور کے چیئرپرسن کے عہدے پرجسٹس سید افتخار حسین شاہ کی تعیناتی کی منظوری دی جبکہ انجمن ناشران قرآن مجید اردو بازار لاہور کے صدر کے عہدے کیلئے کاشف اقبال کے نام کی منظوری دی گئی۔ کابینہ اجلاس میں قرآن کریم کے شہید اوراق کو مناسب طریقے سے تلف کرنے کیلئے ڈسپوزل پلانٹ کے قیام کا فیصلہ کیا گیا اورپنجاب کابینہ نے مدینہ فاؤنڈیشن کو ڈسپوزل پلانٹ لگانے کی منظوری دی،اجلاس میں دی پنجاب ڈرگ اینڈ کاسمیٹکس ترمیمی ایکٹ 2019 کی منظوری دی گئی جبکہ ری پروڈیکٹو مٹرنل،چلڈرن ہیلتھ اینڈ نیوٹریشن پروگرام کی لیڈی ہیلتھ ورکرز اور دیگر سٹاف کی ریگولرائزیشن کیلئے قانون سازی کا فیصلہ کیا گیا۔ کابینہ نے اس پروگرام کے تحت لیڈی ہیلتھ ورکرزاور دیگر سٹاف کیلئے ڈائینگ کیڈرکی شرط ختم کرنے کی منظوری دی،ایل ڈی اے لینڈ یوزر ریگولیشن اوریونیورسٹی آف واہ ایکٹ 2019 میں ترامیم کی منظوری دی گئی۔اجلاس میں قلعہ ستار شاہ، ونڈالہ ناصر اور چوہیانوالی کلاں پٹوار سرکل کو تحصیل مریدکے سے تحصیل فیروزالہ منتقل کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔پنجاب کابینہ نے قلعہ ستار شاہ، ونڈالہ ناصر اور چوہیانوالی کلاں پٹوار سرکل کو تحصیل مریدکے سے تحصیل فیروزوالہ منتقل کرنے کی منظوری دی۔ضلع چکوال کے گاؤں دروٹ کو تحصیل تلہ گنگ میں شامل کرنے کی منظوری دی گئی جبکہ ڈیزاسٹر مینجمنٹ آرگنائزیشنز پنجاب کے آڈٹ برائے مالی سال 2018-19 کے بارے میں آڈیٹر جنرل آف پاکستان کی آڈٹ رپورٹ کی منظوری دی گئی جبکہ لینڈ ایکوزیشن ایکٹ کی شق 43-A کے تحت قائداعظم تھرمل پاور پرائیویٹ لمیٹڈ کو پراجیکٹ لینڈ مورگیج کی اجازت دینے کا فیصلہ موخرکرتے ہوئے کابینہ کمیٹی برائے لیجسلیٹو بزنس کو تمام امورکا جائزہ لیکر حتمی رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی گئی۔کابینہ نے ٹڈی دل کے حملے سے بچاؤ، ضروری اقدامات اور مشینری کی خریداری کے لئے 50 کروڑ روپے فی الفور جاری کرنے کی منظوری دی،وزیر اعلیٰ نے ہدایت کی کہ فصلوں کو بچانے کے لئے ضروری اقدام اٹھایا جائے اور متعلقہ محکمے ہنگامی حالات کو مد نظر رکھ کر کام کریں ،انہوں نے کہا کہ پنجاب میں آٹے یا گندم کا کوئی بحران نہیں ، پنجاب حکومت کے پاس گندم کے وافرذخائر موجود ہیں ،ہم خیبر پختونخوا کو بھی گندم دے رہے ہیں ۔اس سے قبل وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی زیرصدارت اجلاس ہوا،جس میں لاہور میں ٹریفک نظام کو بہتر بنانے اور شہریوں کی آمد و رفت میں مشکلات کے ازالے کیلئے تجاویز کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔وزیراعلیٰ نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہابھاٹی چوک(داتا دربار)، شملہ پہاڑی چوک، گڑھی شاہو چوک(علامہ اقبال روڈ)، ورکشاپ چوک (آؤٹ فال روڈ)، اللہ ہو چوک، اکبر چوک (مولانا شوکت علی روڈ)، حسین چوک (نور جہاں روڈ)، ریگل چوک مال روڈ اور بابوصابو انٹرچینج چوک پر ٹریفک کی روانی کیلئے ہر ضروری اقدام کیا جائے گا۔انہوں نے کہاان مقامات پر ٹریفک مینجمنٹ پلان کے ذریعے بہتری لائی جائے گی اورسرکلر روڈ کو بھی اپ لفٹ کیا جائے گا۔ ٹریفک میں خلل کا باعث بننے والی رکاوٹوں کو فی الفور دور کیا جائے ۔وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ شہر میں پارکنگ کی سہولتوں میں اضافہ کیا جائے ۔انہوں نے کہااس ضمن میں نئے پارکنگ پلازے تعمیر کرنے کا جائزہ لیا جائے ۔وزیراعلیٰ نے مزید ہدایت کی کہ لاہور کیلئے ٹریفک کا ماسٹر پلان تیار کیا جائے ، ٹریفک نظام میں بہتری کیلئے ٹائم لائن کے ساتھ اقدامات کئے جائیں۔لاہور میں ٹریفک کے نظام کو ہر صورت بہتر بنانا ہوگا۔​
     

اس صفحے کو مشتہر کریں