1. اس فورم پر جواب بھیجنے کے لیے آپ کا صارف بننا ضروری ہے۔ اگر آپ ہماری اردو کے صارف ہیں تو لاگ ان کریں۔

بچوں کی نظمیں

'اردو ادب و شعر و شاعری' میں موضوعات آغاز کردہ از فارقلیط, ‏22 جنوری 2013۔

  1. فارقلیط
    آف لائن

    فارقلیط ممبر

    شمولیت:
    ‏19 جنوری 2013
    پیغامات:
    12
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    ملک کا جھنڈا:
    منہ میں ہے جو اک زبان
    ہے خدا کی اعلیٰ شان
    اس میں ہڈی ہے نہ بال
    ہیئت اس کی بے مِثال
    یہ ہے نعمت عالی شان
    منہ میں ہےجو اک زبان
    یہ ہے نعمت عالی شان
    منہ میں ہے جو اک زبان
    یہ بھلی تو سب بھلے
    یہ بری تو سب برے
    خوش گمان و بد گمان
    منہ میں ہے جو اک زبان
    پہلے خوب تولیے
    اس کے بعد بولیے
    لفظ لفظ اِمتحان
    منہ میں ہے جو اک زبان
    چپ رہے تو دے نجات
    راز کھولے کر کے بات
    ایک چپ میں سو امان
    منہ میں ہے جو اک زبان
    یہ دُعا بھی دیتی ہے
    بد دُعا بھی دیتی ہے
    اس سے مانگیے امان
    منہ میں ہے جو اک زبان
    حِکمتِ خُدا ہے بس
    ان پہ کھائیے ترس
    لوگ جو ہیں بے زبان
    منہ میں ہے جو اک زبان
    ہے وفا کی یہ دُعا
    وہ زبان دے خدا
    حمد جو کرے بیان
    منہ میں ہے جو اک زبان
    http://www.oururdu.com/forums/images/smilies/p_rose123.jpg

    محمد حسین وفا جونپوری
     
  2. ھارون رشید
    آف لائن

    ھارون رشید برادر سٹاف ممبر

    شمولیت:
    ‏5 اکتوبر 2006
    پیغامات:
    131,683
    موصول پسندیدگیاں:
    16,916
    ملک کا جھنڈا:
    جواب: بچوں کی نظمیں

    عالیشان جی عالیشان
     

اس صفحے کو مشتہر کریں